مرنے کے بعدآپ کہاں جائیں گے؟



سوال: مرنے کے بعدآپ کہاں جائیں گے؟

جواب:
بائبل بالکل واضح الفاظ میں سکھاتی ہے کہ بنیادی طور پرآپ کے پاس صرف دو انتخابات فردوس اور جہنم ہیں جہاں آپ مرنے کے بعد جاسکتے ہیں۔ بائبل یہ بھی واضح طور پر سکھاتی ہے کہ آپ خود اِس بات کا تعین کر سکتے ہیں کہ آپ کو مرنے کے بعد کہاں جانا ہے۔ کیسے ؟ ۔ پڑھتے رہیے۔

سب سے پہلا مسلہ یہ ہے کہ ہم سب نے گُناہ کیا ہے۔ (رومیوں۲۳:۳)۔ ہم نے وہ سب کچھ کیا ہے جو غلط، بُرا اور غیر اخلاقی ہے۔ (واعظ۲۰:۷)۔ ہمارا گُناہ ہمیں خُدا سے جُدا کرتا ہے، اور اگر ہم اِس مسلہ کا حل نہ نکالیں تو ہمارا گُناہ ہمیں ہمیشہ کے لیے خُدا سے جُدا کر دے گا۔ (متی۴۶:۲۵؛رومیوں۲۳:۶)۔ خُدا سے یہ ابدی جُدائی ہی جہنم ہے، جِسے بائبل میں ابدی آگ کی جھیل کے طور پر بیان کیا گیا ہے۔ (مکاشفہ۱۴:۲۰۔۱۵)۔

خُدا نے اِس مسلہ کو اِس طرح حل کیا کہ خُدا خود یسوع مسیح کی ذات میں انسان بنا۔ (یوحنا۱:۱؛۱۴:۱؛۵۸:۸؛۳۰:۱۰)۔ اُس نے گُناہ سے پاک زندگی گزاری (۱۔پطرس۲۲:۳؛۱۔یوحنا۵:۳)اور اپنی مرضی سے ہماری خاطر اپنی جان قُربان کردی (۱۔کرنتھیوں۳:۱۵؛۱۔پطرس۱۸:۱۔۱۹)۔ اُس کی موت نے ہمارے گُناہوں کی قیمت ادا کی (۲۔کرنتھیوں۲۱:۵)۔ اب خُدا ہمیں ہمارے گُناہوں کی معافی اور نجات تحفہ کے طور پر پیش کرتا ہے۔ (رومیوں۲۳:۶)جو کہ ہم صرف ایمان کے وسیلہ سے حاصل کر سکتے ہیں(یوحنا۱۶:۳؛افسیوں۸:۲۔۹)۔ ’’خُداوند یسوع پر ایمان لا تو تُو نجات پائے گا‘‘ (اعمال۳۱:۱۶)۔ اپنے نجات دہندہ کے طور پر فقط یسوع پر ایمان لا، اپنے گناہوں کی قیمت کے طور پر صرف اُس کی قُربانی پرتکیہ کر۔جیسا کہ خُدا کا کلام سکھاتا ہے پھر تمہارے ساتھ آسمان میں ابدی زندگی کاعہد باندھا جائے گا۔

مرنے کے بعد آپ کہاں جاؤ گے؟اِس کا انحصار آپ پر ہے۔ خُدا اپنی پسند آپ کے سامنے پیش کرتا ہے۔ خُدا آپ کو اپنے پاس آنے کے لیے دعوت دیتا ہے۔ یہ آپ کی بُلاہٹ ہے۔

اگر آپ محسوس کرتے ہیں کہ خُداآپ کو یسوع مسیح پر ایمان لانے کے لیے کھینچ رہا ہے (یوحنا۴۴:۶)، تو آ پ نجات دہندہ کے پاس آ جائیں۔ اگر خُدا آپ کی آنکھوں سے پردہ ہٹا کر آپ کا روحانی نابیناپن ختم کر رہا ہے (۲۔کرنتھیوں۴:۴)تواپنی نگاہیں نجات دہندہ پر لگائیں۔ اگر آپ اپنے مُردہ پن میں زندگی کی چمک کاتجربہ کر رہے ہیں(افسیوں۱:۲)تو نجات دہندہ کے وسیلہ سے زندگی کے پاس آئیں۔

مرنے کے بعد آپ کہاں جائیں گے؟ فردوس یا جہنم ۔ یسوع مسیح کے وسیلہ سے آ پ جہنم سے بچ سکتے ہیں۔ یسوع مسیح کو اپنا نجات دہندہ قبول کریں۔ تب فردوس آپ کی دائمی منزل ہو گی۔ اِس سے ہٹ کر کیے گئے فیصلہ کا نتیجہ جہنم میں خُدا سے ابدی جُدائی ہو گا۔ (یوحنا۶:۱۴؛اعمال۱۲:۴)۔

اب اگر آپ دونوں امکانات کو سمجھ گئے ہیں کہ آپ مرنے کے بعد کہاں جاسکتے ہیں۔ اور آپ یسوع مسیح کو اپناشخصی نجات دہندہ قبول کرنے کے لیے ایمان لانا چاہتے ہیں تو اِس بات کو یقینی بنائیں کہ آپ مندرجہ ذیل باتوں کو سمجھتے اور اِن پر ایمان لاتے ہیں، اور اپنے ایمان کو عملی جامہ پہنانے کے لیے مندرجہ ذیل گفتگوخُدا سے کریں۔ ’’اے خُدا، میں جانتا ہوں کہ میں گہنگار ہوں، اور میں جانتا ہوں کہ میں اپنے گناہ کی وجہ سے تُجھ سے ابدی جُدائی کا مستحق ہوں ۔ شکرگزار ہوں تیری اُس محبت کے لیے جس کا میں حق دار نہیں تھا اور اپنے گناہوں کی معافی کے لیے مہیا کردہ قُربانی کے لیے جو یسوع مسیح کی موت اور قیامت سے حاصل ہوتی ہے۔ میں ایمان لاتا ہوں کہ یسوع میرے گناہوں کی خاطر مرگیااور میں اپنی نجات کے لیے صرف اُسی پر ایمان لاتا ہوں۔ اب سے آگے توفیق بخش کہ میں گُناہ کی بجائے اپنی زندگی تیری خاطر گزار سکوں۔ توفیق بخش کہ میں اپنی باقی ماندہ زندگی اِس قابلِ تعریف نجات کی شکرگزاری میں گزار دُوں جو تُو نے بخشی۔ یسوع مُجھے بچانے کے لیے آپ کا شکریہ!

جو بھی کچھ آپ نے یہاں پڑھا ہے اس کی بنیاد پر کیا آپ نے مسیح کے لئے فیصلہ لیا ہے؟ اگر آپکا جواب ہاں میں ہے تو برائے مہربانی اس جگہ پر کلک کریں جہاں لکھا ہے کہ آج میں نے مسیح کو قبول کر لیا ہے۔



اردو ہوم پیج میں واپسی



مرنے کے بعدآپ کہاں جائیں گے؟