آخری زمانے کے نشانات کیا ہیں؟



سوال: آخری زمانے کے نشانات کیا ہیں؟

جواب:
متی 8-5 :24 ہمارے لئے کچھ ضروری سراغ یا سلسلہ خیالات پیش کرتے ہیں تاکہ ہم آخری زمانے کی پہنچ کی بات فرق دیکھ اور پہچان سکیں۔ جھوٹے مسیح کی بڑھوتری، جنگ و جدل کی بڑھوتری اور اکال کی بڑھوتری، وبائيں اور قدرتی آفتیں۔ یہ سب کچھ آخری زمانہ کے نشانات ہیں۔ اس بارے میں حالانکہ ہم کو خبردار کیا گیا ہے کہ ہم دھوکہ نہ کھائیں کیونکہ یہ سارے واقعات مصیبتوں کا شر وع ہی ہوں گی مگر آخری زمانہ کا آنا ابھی بھی باقی ہے۔

کچھ مترجم (علماء) اشارہ کرتے ہیں کہ ہر ایک زلزلہ، ہر ایک سیاسی معاشرتی انقلاب اور اسرائیل پر ہر ایک حملہ ایک یقینی نشان بطور ہیں کہ آخری زمانہ بہت جلد قدم رکھنے والا ہے۔ جبکہ یہ واقعات آخری دنوں کی پہنچ کی بابت اشارہ سے اطلاع دینے والے بطور ہوسکتے ہیں۔ مگر یہ ضروری نہیں کہ یہ اطلاع دیتے ہوں کہ آخری زمانہ دروازہ پر پہنچ چکا ہے۔ پولس رسول نے خبر دار کیا ہے کہ آخری زمانہ جھوٹی تعلیم کی بڑھوتری کو لے کر آئے گا۔ "لیکن روح صاف فرماتا ہے کہ آئندہ زمانوں میں بعض لوگ گمراہ کرنے والی روحوں اور شیاطین کی تعلیموں کی طرف متوجہ ہو کر ایمان سے برگشتہ ہو جائیں گے (1 تموتھیس 4:1)۔ آخری زمانہ کو "خطرناک ایام" بھی کہا گیا ہے کیونکہ لوگوں کے برے کام بڑھتے ہی جائیں گے جو سرگرمی سے سچائی کو روکیں گے۔ (2 تموتھیس ( 9 – 1 :3 اور 2 تھسلنیکیوں 2:3 کو بھی دیکھیں)۔

دیگر ممکن نشانات یروشلیم میں یہودیوں کی ہیکل کا دوبارہ سے تعمیر کیا جانا، اسرائیل کی طرف مخالفت اور دشمنی کا بڑھنا اور ایک واحد دنیا کی حکومت کی طرف پیش قدمی وغیرہ ہیں۔ سب سے زیادہ مشہور و معروف آخری زمانہ کا نشان کسی طرح بنی اسرائیل قوم ہے۔ 1948 میں اسرائیل ایک اعلی صوبہ بطور پہچانا گیا تھا۔ خاص طور سے 70 عیسوی سے لے کر اب تک پہلی بار ایسا ہوا۔ خدا نے ابرہام سے وعدہ کیا تھا کہ اس کی آنے والی نسلیں کنعان میں "دائمی ملکیت " بطور ہو ں گی۔ (پیدائش 17:8)، اور حزقی ایل نے نبوت کی تھی کہ اسرائیل کو جسمانی طور سے اور روحانی طور سے دوبارہ جان ڈالا جائے گا یا اس کو تازہ کیا جائے گا۔ (حزقی ایل 37باب) بنی اسرائیل قوم کو اپنے خود کے ملک میں ہونا ہی آخری زمانہ کی نبوت کی روشنی ہے کیونکہ اسرائیل کا نمود معاد کے عقیدہ میں گنا جاتا ہے (دانی ایل 11:41، 10:14؛ مکاشفہ 11:8)۔

دماغ میں ان نشانات کے ساتھ ہم آخری زمانہ کے توقع کے سلسلہ میں دانش مند اور صاحب بصیرت ہو سکتے ہیں۔ کسی طرح ہم ان واقعات میں سے ایک کو لے کر قیاس نہ کر لیں کہ یہ آخری زمانہ کی پہنچ عنقریب ہونے کی صاف علامت ہے۔ خدا نے ہم کو کافی معلومات کا خزانہ عطا کیا ہے کہ ہم اس کے لئے تیار رہ سکتے ہیں اور اسی کے لئے بلائے بھی گئے ہیں۔



اردو ہوم پیج میں واپسی



آخری زمانے کے نشانات کیا ہیں؟