کیا فردوس کے مختلف درجات ہیں؟


سوال: کیا فردوس کے مختلف درجات ہیں؟

جواب:
فردوس کے مختلف درجات کے ہونے کے بارے میں سب سے قریب ترین بات جو کتاب مقدس بیان کرتی ہے وہ 2 کرنتھیوں باب 12 آیت 2 میں ملتی ہے۔ "میں مسیح میں ایک شخص کو جانتا ہوں چودہ برس ہوئے کہ وہ یکایک تِیسرے آسمان تک اُٹھا لیا گیا۔ نہ مُجھے معلوم کہ بدن سمیت نہ یہ معلوم کہ بغیر بدن کے۔ یہ خُدا کو معلوم ہے"۔ بعض لوگ اِس کی تشریح کرتے ہیں کہ فردوس کے تین مختلف درجات ہیں۔ ایک درجہ "سُپر مُخلص مسیحیوں" یا اُن مسیحیوں کے لئے جنہوں نے روحانیت کا سب سے اعلٰی درجہ حاصل کیا ہے، ایک درجہ "عام" مسیحیوں کے لئے، اور ایک درجہ اُن مسیحیوں کے لئے جووفاداری سے خُدا کی خدمت نہیں کرتے۔ اِس نظریہ کی بنیاد کتابِ مقدس میں نہیں ہے۔

پولُس یہ نہیں کہہ رہا کہ تین فردوس ہیں یا فردوس کے تین درجات ہیں۔ بہت سی قدیم ثقافتوں میں، لوگ اصطلاح آسمان/فردوس کو تین مختلف جہانوں، آسمان، بیرونی خلا، اور پھر ایک روحانی فردوس کو بیان کرنے کے لئے استعمال کرتے تھے۔ پولُس رسول کہہ رہا تھا کہ خُدا اُسے "روحانی" فردوس یعنی مادی کائنات سے باہر جہان میں لے گیا جہاں خُدا رہتا ہے۔ فردوس کے تین مختلف درجات کے نظریہ نے شاید Dante's The Divine Comedy ڈینٹس دا ڈِوائن کامیڈی سے جنم لیا ہے جس میں شاعر فردوس اور جہنم دونوں کو مختلف نو درجات رکھتے ہوئے بیان کرتا ہے۔ تاہم دا ڈِوائن کامیڈی ایک افسانوی کام ہے۔ فردوس کے مختلف درجات کا نظریہ بائبل کے لئے اجنبی ہے۔

کتاب مقدس فردوس میں مختلف انعامات/اجروں کی بات کرتی ہے۔ یسوع نے اجروں کے بارے میں فرمایا، "دیکھ میں جلد آنے والا ہوں اور ہر ایک کے کام کے مُوافق دینے کے لئے اجر میرے پاس ہے" (مکاشفہ باب 22 آیت 12)۔ چونکہ یسوع ہمارے کاموں کےمطابق اجر بانٹے گا، ہم محفوظ طریقے سے کہہ سکتے ہیں کہ ایمانداروں کے لئے اجر کا ایک وقت ہو گا اور اجرکسی قدر شخص سے شخص تک مختلف ہوں گے۔

صرف اُن کاموں کی جو آگ کی آزمائش کے بعد باقی رہیں گے ابدی قدر ہو گی اور اجر کے لائق ہوں گے۔ اِن قابلِ قدر کاموں کو "سونے، چاندی، اور قیمتی پتھروں" کے طور پر بیان کیا گیا ہے (پہلا کرنتھیوں باب 3 آیت 12) اور یہ وہ چیزیں ہیں جو مسیح میں ایمان کی بنیاد پر تعمیر کی گئ ہیں۔ اُن کاموں کوجن کا اجر نہیں ملے گا "لکڑی، گھاس، اور بھوسا" کہا جاتا ہے، یہ بُرے کام نہیں ہیں بلکہ یہ بغیر ابدی قدر کے ساتھ سطحی سرگرمیاں ہیں۔ اجر "مسیح کے تختِ عدالت" پر تقسیم کئے جائیں گے، جہاں ایمانداروں کی زندگیوں کا اجر دینے کے مقصد کے لئے جائزہ لیا جائے گا۔ ایمانداروں کی عدالت گناہوں کی سزا کو ہرگز پیش نہیں کرتی۔ یسوع مسیح کو ہمارے گناہوں کی سزا دی گئی ہے جب اُس نے صلیب پر اپنی جان دی، اور خُدا نے ہمارے بارے میں کہا، "اِس لئے کہ میں اُن کی ناراستیوں پر رحم کرُوں گا اور اُن کے گناہوں کو پھر کبھی یاد نہیں کرُوں گا" (عبرانیوں باب 8 آیت 12)۔ واہ! کتنا عظیم خیال ہے! مسیحیوں کو سزا کا خوف کرنے کی ضرورت نہیں ہے، بلکہ اجر کے تاجوں کا شدت سے انتظار کرنا چاہیے جن کو وہ اپنے منجی کے پاؤں میں رکھ سکتے ہیں۔ نتیجہ کے طور پر، فردوس میں درجات نہیں ہیں، بلکہ فردووس میں اجر کےمختلف درجات ہیں۔

English
اردو ہوم پیج میں واپسی
کیا فردوس کے مختلف درجات ہیں؟