فردوس میں جانا۔میں اپنی ابدی منزل کی ضمانت کیسے دے سکتا ہوں؟



سوال: فردوس میں جانا۔میں اپنی ابدی منزل کی ضمانت کیسے دے سکتا ہوں؟

جواب:
یقین جانیں۔ وہ دن جب ہم ابدیت میں قدم رکھیں گے ہماری سوچ سے بھی جلدی آ سکتا ہے۔ اُس لمحہ کی تیاری میں ہمیں حقیقت سے واقف ہونے کی ضرورت ہے۔ ہر کوئی جنت میں نہیں جائے گا۔ ہم یقین سے کیسے کہہ سکتے ہیں کہ ہم فردوس میں جائیں گے۔ دو ہزار سال پہلے، پطرس اور یوحنا رسول یروشلیم میں ایک بڑے مجمع کے سامنے یسوع مسیح کی انجیل کی منادی کر رہے تھے۔ پطرس نے ایک عمیق بیان دیا جس کی گونج آج تک ہماری دُنیا میں سُنائی دے رہی ہے۔ "اور کسی دوسرے کے وسیلہ سے نجات نہیں کیونکہ آسمان کے تلے آدمیوں کو کوئی دوسرا نام نہیں بخشا گیا جس کے وسیلہ سے ہم نجات پا سکیں"(اعمال۱۲:۴)۔

(اعمال۱۲:۴) اب اِس طرح سیاسی لحاظ سے درست نہیں مانی جاتی۔ آج یہ کہنا بہت مقبول ہو چکا ہے کہ ’’ہر کوئی جنت میں جائے گا‘‘ یا ’’تمام راستے فردوس کو جاتے ہیں‘‘۔ بہت سے لوگ ہیں جو سوچتے ہیں کہ وہ یسوع کے بغیر فردوس میں جا سکتے ہیں۔ وہ جلال تو چاہتے ہیں لیکن وہ صلیب کی وجہ سے تکلیف اُٹھانا نہیں چاہتے۔ بہت کم ہیں جو صلیب کی خاطر مرتے ہیں۔ بہت سے لوگ ہیں جو یسوع کو فردوس کا واحد راستہ قبول کرنا نہیں چاہتے اور کوئی دوسرا راستہ تلاش کرنے کا اِرادہ رکھتے ہیں۔ لیکن یسوع ہمیں خبردار کرتا ہے کہ کوئی دوسرا راستہ نہیں ہے اور اِس حقیقت کو مسترد کرنے کا نتیجہ جہنم میں ابدی موت ہے۔ اُس نے فرمایا ’’جو بیٹے پر ایمان لاتا ہے ہمیشہ کی زندگی اُس کی ہے لیکن جو بیٹے کی نہیں مانتا زندگی کو نہ دیکھے گا بلکہ اُس پر خُدا کا غضب رہتا ہے‘‘ (یوحنا۳۶:۳)۔ مسیح یسوع پر ایمان ہی جنت میں جانے کی کُنجی ہے۔

کچھ استدلال کریں گے کہ یہ نہایت خُدا کی تنگ نظری ہے کہ وہ فردوس میں جانے کے لیے صرف ایک راستہ فراہم کرے۔ لیکن حقیقت میں، خُدا کے خِلاف انسانیت کی بغاوت کی روشنی میں اُس کی بالکل کشادہ ذہنی ہے کہ اُس نے کوئی ایک راستہ ہی فراہم کر دیا۔ ہم سب عدالت کے مستحق ہیں، لیکن خُدا اپنے اکلوتے بیٹے کو ہمارے گناہوں کے بدلے مرنے کے لیے بھیج کرہمیں بچنے کا راستہ فراہم کرتا ہے۔ کوئی اِسے تنگی نظری سمجھے یا کشادہ دِلی لیکن یہی حقیقت ہے۔ خوشخبری یہ ہے کہ یسوع مر گیا اور دوبارہ جی اُٹھا؛ جو لوگ فردوس میں جانا چاہتے ہیں وہ اِس خوشخبری کو قبول کرتے ہیں۔

آج بہت سے لوگ کمزور انجیل کو مانتے ہیں جس میں توبہ کی ضرورت محسوس نہیں کی جاتی۔ وہ محبت کرنے والے (غیر منصف)خُدا پر ایمان رکھنا چاہتے ہیں جو گناہوں کو خاطر میں نہ لائے اور طرزِ زندگی میں تبدیلی کا مطالبہ نہ کرے۔ وہ ایسی باتیں کہہ سکتے ہیں ’’میرا خُدا ایک بھی شخص کو جہنم میں نہیں بھیجے گا‘‘۔ لیکن یسوع نے فردوس سے کہیں زیادہ جہنم کا ذکر کیا، اور اُس نے اپنے آپ کو ایسے نجات دہندہ کے طور پر پیش کیا جوفردوس میں جانے کا واحد ذریعہ پیش کرتا ہے۔ ’’راہ اور حق اور زندگی میں ہوں۔ کوئی میرے وسیلہ کے بغیر باپ کے پاس نہیں آتا‘‘ (یوحنا۶:۱۴)۔

درحقیقت خُدا کی بادشاہی میں کون داخِل ہو گا؟ میں اِس بات کی ضمانت کیسے دے سکتا ہوں کہ میں خُدا کی بادشاہی میں جاؤں گا؟ بائبل ہمیشہ کی زندگی پانے اور نہ پانے والوں کے درمیان واضح فرق پیدا کرتی ہے ۔ ’’جس کے پاس بیٹا ہے اُس کے پاس زندگی ہے اور جس کے پاس خُدا کا بیٹا نہیں اُس کے پاس زندگی بھی نہیں‘‘ (۱۔یوحنا۱۲:۵)۔ بات پھر ایمان پر آ جاتی ہے۔ جو یسوع پر ایمان لاتے ہیں وہ خُدا کے فرزند بن جاتے ہیں (یوحنا۱۲:۱)۔ جو اپنے گناہوں کی ادائیگی کے طور پر یسوع کی قربانی کو قبول کرتے ہیں اور اُس کی قیامت پر ایمان رکھتے ہیں وہ فردوس میں جائیں گے۔ جو یسوع کو ردّ کرتے ہیں وہ نہیں جائیں گے ’’جو اُس پر ایمان لاتا ہے اُس پر سزا کا حکم نہیں ہوتا۔ جو اُس پر ایمان نہیں لاتا اُس پر سزا کا حکم ہو چُکا۔ اِس لیے کہ وہ خُدا کے اکلوتے بیٹے کے نام پر ایمان نہیں لایا‘‘ (یوحنا۱۸:۳)۔

فردوس اُن لوگوں کے لیے جو یسوع کو اپنا نجات دہندہ قبول کرتے ہیں جنتی خوبصورت ہو گی ، جہنم اُن لوگوں کے لیے جو اُسے ردّ کرتے ہیں اُس سے بھی کہیں زیادہ بھیانک ہو گی۔ کوئی اِس بات کو بار بار تصور میں لائے بغیر بائبل کو سنجیدگی سے پڑھ نہیں سکتا۔ لکیر کھینچی جا چُکی ہے۔ بائبل فرماتی ہے کہ فردوس کا راستہ صرف اور صرف ایک ہی ہے۔ اور وہ یسوع ہے۔ یسوع کے حکم کی پیروی کریں: ’’تنگ دروازہ سے داخل ہو کیونکہ وہ دروازہ چوڑا ہے اور وہ راستہ کشادہ ہے جو ہلاکت کو پہنچاتا ہے اور اُس سے داخل ہونے والے بہت ہیں۔ کیونکہ وہ دروازہ تنگ ہے اور وہ سُکڑا ہے جو زندگی کو پہنچاتا ہے اور اُس کے پانے والے تھوڑے ہیں‘‘ (متی۱۳:۷۔۱۴)۔ فردوس میں جانے کا واحد ذریعہ یسوع پر ایمان ہی ہے۔ جو ایمان لاتے ہیں اُن کو وہاں جانے کی ضمانت ملتی ہے۔ کیا آپ یسوع پر ایمان لاتے ہیں؟

جو بھی کچھ آپ نے یہاں پڑھا ہے اس کی بنیاد پر کیا آپ نے مسیح کے لئے فیصلہ لیا ہے؟ اگر آپکا جواب ہاں میں ہے تو برائے مہربانی اس جگہ پر کلک کریں جہاں لکھا ہے کہ آج میں نے مسیح کو قبول کر لیا ہے۔



اردو ہوم پیج میں واپسی



فردوس میں جانا۔میں اپنی ابدی منزل کی ضمانت کیسے دے سکتا ہوں؟