كيا مسيحي اور مسلمان ايك هي خدا كي عبادت كرتے هيں؟




سوال: كيا مسيحي اور مسلمان ايك هي خدا كي عبادت كرتے هيں؟

جواب:
اس سوال کا جواب اس بات پر منحصر هے که "ایک جیسے "خدا سے کیا مراد هے۔ اس سے انکار نهیں که مسلمانوں کے خیال میں خدا اور مسیحیوں کے خیال میں خدا میں بهت سی قدریں مشترک هیں۔ دونوں کے خیال میں خدا اقتدار اعلیٰ هے ، قادرِ مطلق هے، سب کچھ جاننے والا، هر جگه موجود، پاک، صرف، راست هے۔ دونوں اسلام اور مسحیت ایک خدا پر یقین رکھتے هیں جس نے کائنات کی هر چیز کو پیدا کیا۔ پس ، هاں ، اس رو سے، مسیحی اور مسلمان ایک جیسے خدا کی عبادت کرتے هیں۔

ایک هی وقت میں مسیحیوں اور مسلمانوں کے درمیان خدا کے تصور کے بارے میں اهم فرق بھی هے۔ جبکه مسلمانوں کے خیال میں الله میں یه صفات هیں، پیار، رحم اور فضل؛ الله ایسی خوبیوں کو ظاهر نهیں کرتا جیسے که مسیحی خدا کرتا هے۔ اگرچه سب سے زیاده خاص فرق، مسلمانوں اور مسیحیوں کے خد کے تصور کے درمیان جو که مجسم هونے کا تصور هے۔ مسیحی یقین رکھتے هیں که خدا یسوع مسیح کی صورت میں انسان بنا۔ مسلمان یقین رکھتے هیں که یه تصور انتهائی طور پر گستاخی هے۔ مسلمان کبھی بھی اس تصور کو قبول نهیں کرسکتے که الله ایک انسان بنا اور دنیا کے گناهوں کے لئے مُوا۔ خدا کے مجسم هونے پر یقین که وه شخصی طور پر یسوع مسیح هے مسیحیوں کے لئے خدا کے بارے میں اتفاقِ رائے کے لیے نهایت ضروری هے۔ خدا ایک انسان بنا پس وه همارے درد میں همارے ساتھ شریک هوسکتا هے اور سب سے ضروری ، پس وه نجات اور گناهوں کی معافی دے سکتا هے۔

پس، کیا مسیحی اور مسلمان ایک هی خدا کی عبادت کرتے هیں؟ ها ں اور نهیں۔ شاید اچھا سوال یه هوگا ، "کیا مسیحی اور مسلمان دونوں درست سوچ رکھتے هیں که خدا کیاچاهتا هے؟اس کا جواب یقینی طور پر نهیں هے۔ یهاں پر مسیحیوں اور مسلمانوں کے خدا کے تصور کے درمیان کئی فیصله کن اختلافات هیں۔ دونوں ایمان درست نهیں هو سکتے۔ هم یقین رکھتے هیں که مسیحی خدا کے بارے میں درست تصور رکھتے هیں کیونکه اس وقت تک نجات نهیں جب تک گناه کا کفار ه نه ادا کیا جائے۔ صرف خدا هی یه قیمت ادا کرسکتا هے ۔ صرف انسان بننے کے ذریعے خدا هماری جگه مر سکتا هے اور همارے گناهوں کا جرمانه ادا کرتا هے ﴿رومیوں5باب8آیت؛2۔کرنتھیوں5باب21آیت﴾۔



واپس اردو زبان کے پہلے صفحے پر



كيا مسيحي اور مسلمان ايك هي خدا كي عبادت كرتے هيں؟