نئے سرے سے پیدا ہوا مسیحی کہلانا کیا معنی رکھتا ہے؟



سوال: نئے سرے سے پیدا ہوا مسیحی کہلانا کیا معنی رکھتا ہے؟

جواب:
نئے سرے سے پیدا ہوا مسیح کہلانا کیا معنی رکھتا ہے؟ کتاب مقدس کی اعلی درجہ کی عبارت جو اس سوال کے لئے جواب پیش کرتی ہے وہ ہے یوحنا 21-1 :3۔ خداوند یسوع مسیح نیکدیمس سے بات کرتا ہے جو ایک مشہور و معروف فریسی اور سنحدرین کا ممبر تھا۔ سخدرین یہودیوں کے فرقہ کی ایک سبھا ہوتی ہے جو ان پر حکمران ہوتے ہیں۔ سو نیکدیمس ان میں سے ایک تھا۔ وہ ایک بار رات کے وقت میں یسوع کے پاس کچھ سوال پوچھنے کے لئے آیا تھا۔

جب یسوع نیکدیمس سے باتیں کرنے لگا تو یسوع نے اس سے کہا کہ "میں تجھ سے سچ کہتاہوں کہ جب تک کوئی نئے سرے سے پیدا نہ ہو وہ خدا کی بادشاہی کو نہیں دیکھ سکتا"۔ تب نیکدیمس نے یسوع سے پوچھا "جب آدمی بوڑھا ہو گیا تو وہ کیونکر پیدا ہو سکتا ہے؟ کیاوہ دوبارہ اپنی ماں کے پیٹ میں داخل ہو کر پیدا ہو سکتاہے؟" سو یسوع نے جواب میں اس سے کہا کہ "میں تم سے سچ کہتاہوں کہ جب تک کوئی آدمی پانی اور روح سے پیدا نہ ہو وہ خدا کی بادشاہی میں داخل نہیں ہو سکتا۔ جو جسم سے پیدا ہوا ہے وہ جسم ہے اور جو روح سے پیدا ہوا ہے وہ روح ہے۔ تعجب نہ کر کہ میں نے تجھ سے کہا تمہیں نئے سرے سے پیدا ہونا ضرور ہے۔ (یوحنا 7-3 :3)۔

جو محاورہ ہے "نئے سرے سے پیدا ہونا" یہ اوپر سے پیدا ہونے سے مطلب ہے نیکدیمس کو سچ مچ اس کی ضرورت تھی۔ اس کو اپنے دل کے بدلاؤ کی ضرورت تھی۔ یعنی کہ ایک روحانی مکمل بدلاؤ۔ نئی پیدائش کی۔ نئے سرے سے پیدا ہونا ایک خدا کا عمل ہے جس میں ایک شخص کو جو ایمان لاتاہے ہمیشہ کی زندگی بخشی جاتی ہے۔ (2 کرنتھیوں 17 :5؛ ططس 3:5؛ 1 پطرس 1:3؛ 1 یوحنا 2:29؛ 3:9؛ 4:7؛ 4-1 :5، 18)۔ یوحنا 13، 12 :1 اس بات کا اشارہ کرتاہے کہ نئے سرے سے پیدا ہونا اس خیال کو بھی ظاہر کرتا ہے کہ مسیح یسوع کے نام پر ایمان لانے کے وسیلے سے ہم خدا کے فرزند بن جاتے ہیں۔

لازمی طور پر سے یہ سوال اٹھتا ہے کہ ایک شخص کو نئے سرے سے پیدا ہونے کی کیا ضرورت ہے؟ افسیوں 2:1 میں پولس رسول کہتا ہے "اور اس نے تمہیں بھی زندہ کیا جب اپنے قصوروں ار گناہوں کے سبب سے مردہ تھے" اس نے رومیوں کو لکھا کہ "سب نے گناہ کیا ہے اور خدا کے جلال سے محروم ہوئے ہیں" (رومویں 3:23)۔ گنہ گار لوگ روحانی طور سے "مردہ" ہیں؛ جب وہ مسیح پر ایمان لانے کے ذریعہ روحانی زندگی حاصل کرتے ہیں توکلام پاک اس کو نئے سرے ے پیدا ہونے کی طرف جوڑتاہے۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ وہی لوگ جو نئے سرے سے پیدا ہوئے ہیں ان کے گناہ معاف ہو چکے ہیں اور اب انکا رشتہ خدا کے ساتھ ہے۔

یہ کس طرح سے ہوتاہے؟ افسیوں 9-8 :2 بیان کرتاہےکہ "کیونکہ تم کو ایمان کے وسیلہ سے فضل ہی سے نجات ملی ہے۔ اور یہ تمہاری طرف سے نہیں بلکہ خدا کی بخشش ہے۔ اور نہ اعمال کے سبب سے ہے تاکہ کوئی فخر نہ کرے۔ جب ایک شخص بچایا گيا ہے ، چاہے وہ مرد ہویا عورت وہ نئے سرے سے پیدا ہوا ہے یا ہوئی ہے۔ وہ روحانی طور سے نیا کیاگیا ہے یانئی کی گئی ہے۔ اور وہ نئے پیدائش کے سبب سے خدا کے فرزند ہیں۔ یسوع مسیح پر اس بات کا بھروسا کرنا کہ جب وہ صلیب پر مارا گیا تھا تو اس نے گناہوں کا جرمانہ ادا کیا۔ اسی بھروسے کا نام ہے "نئے سرے سے پیدا ہونا"۔ اس لئے اگر کوئی مسیح میں ہے تو وہ نیا مخلوق ہے۔ پرانی چیزیں جاتی رہیں دیکھو وہ نئی ہو گئیں۔ (2 کرنتھیوں 5:17)

اگر آپ نے کبھی بھی خداوند یسوع مسیح پر آپ کا نجات دہندہ ہونے بطور بھروسہ نہیں کیا ہے تو کیا آپ روح القدس کی تحریک پر دھیان دیں گے کہ وہ آپ کے دل سے بات کرے؟ اس لئے کہ آپ کو نئے سرے سے پیدا ہونا ضروری ہے۔ کیا آپ توبہ کی دعا مانگنے کے لئے دعاکریں گے اور آج ہی مسیح میں ایک نیا مخلوق بنیں گے؟ "جنتوں نے اسے قبول کیا اس نے انہیں خدا کے فرزند بننے کا حق بخشا یعنی انہیں جواس کے نام پر ایمان لاتے ہیں (یوحنا 13-12 :1)۔

اگر آپ مسیح یسوع کو اپنا نجات دہندہ بطور قبول کرنا چاہتے ہیں اور نئے سرے سے پیدا ہونا چاہتےہیں تو یہاں ایک دعا کا نمونہ دیا گیا ہے۔ یاد رکھیں کہ اس دعا کو یا کوئی اور دعا کو کرنے سے آپ بچائے نہیں جائیں گے آپ صرف اور صرف مسیح پر بھروسہ کرنے کے ذریعہ سے اپنے گناہوں سے بچ سکتے ہیں۔ یہ دعا صرف خدا پر آپ کے ایمان کو ظاہرکرتاہے سو آپ اس کا شکریہ اداکریں آپ کے نجات کے انتظام کے لئے آپ اس طرح دعا کریں۔ "اے خدا میں جانتا ہوں کہ میں نے تیرے خلاف گناہ کیا ہے اور میں سزا کا حقدار ہوں۔ مگر جس سزا کا میں حقدار تھا اس سزا کو یسوع مسیح نے اٹھا لیا۔ تاکہ میں اس پر ایمان لانے کے ذریعہ معاف کیا جا سکوں۔ نجات کے لئے میں تجھ پر بھروسا کرتاہوں۔ تیرے اس عجیب فضل اور گناہوں کی بخشش کے لئے اور ہمیشہ کی زندگی کے انعام کے لئے تیرا بے حد شکر گزار ہوں! آمین"۔

جو بھی کچھ آپ نے یہاں پڑھا ہے اس کی بنیاد پر کیا آپ نے مسیح کے لئے فیصلہ لیا ہے؟ اگر آپکا جواب ہاں میں ہے تو برائے مہربانی اس جگہ پر کلک کریں جہاں لکھا ہے کہ آج میں نے مسیح کو قبول کر لیا ہے۔



اردو ہوم پیج میں واپسی



نئے سرے سے پیدا ہوا مسیحی کہلانا کیا معنی رکھتا ہے؟