کیا بائبل آج کے دور کے متعلق ہے ؟




سوال: کیا بائبل آج کے دور کے متعلق ہے ؟

جواب:
عبرانیوں 4 با ب اُسکی 12آیت فرماتی ہے " کیونکہ خدا کا کلام زندہ اورموثر اور ہر ایک دو دھاری تلوار سے زیادہ تیز ہے اور جان اور روح اور بند بند اور گُودے گُودے کو جُدا کر کے گُزر جاتا ہے اور دل کے خیالوں اور اِرادوں کو جانچتا ہے ۔ " جبکہ بائبل تقریبا 1900 سال پہلے مکمل ہوئی تھی ، اِس کی سچائی اور اِس کا آج کے دور سے متعلقہ ہونا ابھی تک ناقابلِ تبدیل ہے ۔ بائبل ان تمام مکاشفوں کا جو خدا نے اپنے بارے میں اور بنی نوع انسان کے لیے منصوبہ کے بارے میں ہمیں دیے ہیں ، اُن کا ایک واحد خارجی ذریعہ ہے ۔ بائبل میں قُدرتی دُنیا کے بارے میں بہت ساری معلومات موجود ہیں جن کی سائنسی مشاہدا ت اور تحقیق سے تصدیق ہو چُکی ہے ۔ اِن پیروں میں سے چند احبار 11 : 17 استثنا 1 : 6 ۔ 7 ، یعقوب 36: 27 ۔ 29 ، زبور 102: 25 ۔ 27 اور کُلسیوں 1 : 16 ۔ 17 شامل ہیں ۔ جیسے ہی بنی نوع انسان کے لیے خدا کے نجات کے منصوبے کی بائبل کی کہانی کا راز سامنے آتا ہے ، بہت سارے کردار وضاحت سے بیان ہوتے ہیں ۔ اِن بیانات میں بائبل انسانی رویے اور رُجحانات کے بارے میں بہت ساری معلوما ت فراہم کرتی ہے ۔ ہمارا اپنا روزمرہ کا تجربہ ظاہر کرتا ہے کہ یہ معلومات کسی نفسیاتی کتاب سے زیادہ درست اور تفصیلی طور پر بیان ہیں ۔ بائبل میں بیان کیے گئے بہت سارے تاریخی حقائق کی تصدیق بائبل سے اضافی ذرائع سے ہو چُکی ہے ۔ تاریخی تحقیق بعض اوقات بائبل کے بیانات اور بالکل انہی واقعیات کے بارے میں بائبل سے اضافی بیانات کے درمیان بہت زیادہ مطابقت ظاہر کرتی ہے ۔

لیکن بائبل ایک تاریخی کتاب ، ایک نفسیاتی متن یا ایک سائنسی رسالہ نہیں ہے ۔ بائبل وہ تفسیر ہے جو خدا نے اِس بارے میں کہ وہ کون ہے ، اور بنی نوع انسان کے لیے اُس کی خواہشات اور منصوبے کیا ہیں ، ہمیں بخشی ہے ۔ اَِس مکاشفہ کا سب سے اعلیٰ و ارفع جُز گناہ کے باعث خدا سے ہماری علیحدگی ار صلیب پر اپنے بیٹے یسوع مسیح کی قُربانی کے وسیلہ سے رفاقت کی بحالی کے لیے خدا کے اہتمام کی کہانی ہے ۔ نجات کے لیے ہماری ضرورت تبدیل نہیں ہوتی ہے ۔ نہ ہی اپنے ساتھ دوبارہ ملانے کے لیے خدا کی خواہش تبدیل ہوتی ہے ۔ بائبل میںبہت زیادہ درست اور متعلقہ معلومات موجود ہیں۔ بائبل کا سب سے اہم پیغام نجات ہے جو کہ عالم گیر اور دائمی طور پر انسانیت پر لاگو ہوتا ہے ۔ خدا کا کلام کبھی متروک ، ناکارہ یا ٹھرین شُدہ نہیں ہو گا ۔ ثقافتیں تبدیل ہوتی ہیں ، قانون بدل جاتے ہیں ، نسلیں آتیں ہیں اور چلی جاتی ہیں لیکن خدا کا کلام آج کے دور کے لیے اُتنا ہی متعلقہ ہے جتنا یہ تب تھا جب یہ پہلی دفعہ لکھا گیا تھا ۔ ضروری نہیں ہے کہ تمام کلام ااج کے دور پر صریحا ( وضاحتاً) لاگو ہوتا ہے ۔ لیکن تمام کلام میں سچائی موجود ہے جو کہ ہم آج کے دور میں اپنی زندگیوں پر لاگو کر سکتے ہیں یا ہمیں کرنی چاہیے ۔



واپس اردو زبان کے پہلے صفحے پر



کیا بائبل آج کے دور کے متعلق ہے ؟