کیا بائبل میں اغلاط ، نقائص یا ختلافات پائے جاتے ہیں ؟




سوال: کیا بائبل میں اغلاط ، نقائص یا ختلافات پائے جاتے ہیں ؟

جواب:
اگر ہم بائبل کو پہلے سے سوچی سمجھی اغلاط کی تلاش کے بغیر مقابلہ کرنے کی خاطر پڑھیں تو ہم اِسے قابلِ فہم ، با اصول اور متعلقہ اعتبار سے ایک آسانی سے سمجھ آنے والی کتاب پائیں گے ۔ جی ہاں ، یہاں پر مُشکل پیرے ہیں ۔ جی ہاں اِس میں ایسی آیات ہیں جو آپس میں اختلافات رکھتی ہیں ۔ ہمیں یہ ضرور یاد رکھنا چاہیے کہ بائبل تقریبا 40 مختلف مصنفین نے تقریبا 1500 سال سے زائد عرصہ میں لکھی تھی ۔ ہر مصنف نے ایک مختلف پیش نظر سے مختلف سُننے والوں کے لیے ایک مختلف مقصد کے لیے ایک مختلف انداز میں لکھا ۔ ہمیں چند چھوٹے چھوٹے اختلافات کو مان لینا چاہیے ۔ تاہم مختلف ہونا نقص نہیں ہے ۔ اگر ایسا کوئی بھی طریقہ نہ ہو کہ آیات اور پیروں کو ہم آہنگ کیا جا سکے تو یہ محض ایک غلطی ہو گی ۔ حتی کہ ابھی تک کوئی جواب دستیاب نہ ہو تو اِس کا مطلب یہ ہر گز نہیں ہے کہ جواب کا سرے سے وجود ہی نہیں ہے ۔ بہت ساروں نے بائبل میں تاریخ اور جغرافیہ سے متعلقہ ایک فرضی غلطی کو تلاش کیا محض یہ دیکھنے کے لیے کہ بائبل دُرست ہے ، ایک دفعہ پھر اِسکی گواہی آثارِ قدیمہ سے دریافت ہو چُکی ہے ۔

ہمیں اکثر اِس طرح کے فقروں پر مبنی سوالات موصول ہوتے ہیں کہ ، " وضاحت کریں کہ کس طرح یہ آیات اختلاف نہیں رکھتی ہیں "، دیکھیے ، یہاں پر بائبل میں غلطی ہے " یہ تسلیم کیا جاتا ہے کہ لوگوں کی طرف سے پیش کی جانے والی بعض باتوں کا جواب دینا مُشکل ہے ۔ تاہم ہماری یہ کوشش ہو تی ہے کہ بائبل کے ہر فرضی اختلاف اور غلطی کا مُفید نتیجہ خیز اور عقلی طور پر قرین قیاس جوابات دیے جائیں ۔ ایسی کُتب اور ویب سائٹ دستیاب ہیں جن میں " بائبل میں تمام اغلا ط " کی فہرست دی گئی ہے ۔ بہت سارے لوگ واضح طور پر اپنے لیے اِس طرح کی باتیں ایسی جگہوں سے لیتے ہیں ، وہ اپنے طور پر اِن فرضی اغلاط کو تلاش نہیں کر تے ہیں ۔ ایسی کُتب اور ویب سائٹ بھی دستیاب ہیں جو اِن فرضی اغلاط میں سے ہر ایک کو جھوٹا ثابت کرتیں ہیں ۔ افسوس ناک بات یہ ہے کہ زیادہ تر لوگ جو بائبل کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہیں وہ حقیقی طور پر جواب میں دلچسپی نہیں رکھتے ہیں ۔ بہت سارے " بائبل پر شدید تنقید کرنے والے " اِن جوابات سے آگاہ ہوتے ہیں ، لیکن وہ بالکل اُس طرح کی پُرانی سوچ کو جاری رکھے ہوئے ہیں کہ بار بار تنقید کرتے رہیں ۔

پس تب ہمیں کیا کرنا ہو گا جب کوئی بائبل کی ایک مدلل( دلیل کے ساتھ ) غلطی کے ساتھ ہمارے پاس آتا ہے ؟ 1) دعا کرتے ہوئے کلام کا مطالعہ کریں یہاں اِس کا ایک واضح حال موجود ہے 2)۔ بائبل کی عُمدہ تفاسیر " بائبل کا دفاع" جیسی کُتب اور بائبل کے بارے میں تحقیقی ویب سائٹ کو استعمال کرتے ہوئے کچھ تحقیق کریں 3) اپنے پادریوں اور کلیسیا کے راہنماوں سے پوچھیں یہ دیکھنے کے لیے کہ اگرچہ اِس کا کوئی حل تلاش کر سکیں )4 اگر بیان کیے گئے 1 ۔ 2 ۔ 3 مرحلوں کے بعد بھی ابھی تک کوئی واضح جواب نہیں ملا تو ہم خدا پر بھروسہ رکھتے ہیں کہ اُس کا کلام سچائی ہے اور یہ کہ اِس کا حل موجود ہے جو کہ ابھی تک واضح طور پر آشکارہ نہیں ہوا ہے ۔ ( تیمتھیس 2 ( 17 ۔ 16 : 3 ، 15: 2 )



واپس اردو زبان کے پہلے صفحے پر



کیا بائبل میں اغلاط ، نقائص یا ختلافات پائے جاتے ہیں ؟